غریب لڑکا اور اس کی سات بہنیں جناب عمران خان سے کیا اپیل کی حیران کن تفصیل

ضلع بہاولپور سے تعلق رکھنے والے ایک سٹوڈنٹ نے عمران خان صاحب سے التجا کرتے ہوئے کہا میری آٹھ بہنیں ہیں میرا باپ فروٹ کی ریڑھی لگاتا ہے جس سے ہمارے گھر کا گزر بسر انتہائی مشکل رہتا ہے
اٹھ بہنیں جو کہ شادی کے لیے مکمل تیار ہیں والی صاحب انتہائی پریشان ہیں کہ ان کی شادی کیسے کی جائے جبکہ فروٹ بیچنے کی انکم سے گھر کے معاملات نہیں چل سکتے ضلع بہاولپور سے تعلق رکھنے والے اس رفیق نامی لڑکے نے کہا جناب عمران خان صاحب آپ قانون پاس کریں

ہر مرد کم سے کم دو لڑکیوں سے شادی کریں یہ قانون پاس ہونے کے بعد عمران خان صاحب کے اس اہم اعلان کے بعد میں اپنی بہن کا رشتہ ہر اس شخص کو دوں گا جو چاہے پہلے تین شادیاں کر چکا ہے مجھے اس چیز پر کوئی اعتراض نہیں لیکن مجھے حکومت وقت سے یہ امید ہے کہ حکومت وقت غریب ماں باپ کی بیٹیوں کی شادی کے لئے اہم اقدامات کرے

اس لڑکے نے مزید کہا کہ اس کے والد رات کو تھکے ہارے گھر پہنچتے ہیں بیٹیوں کے مسکین اور سوال زدہ چہرے دیکھ کر انتہائی پریشان ہوتے ہوئے اپنی چارپائی پر خود بستر سیدھا کرتے ہیں اور سو جاتے ہیں ہر رات ایک نئی امید کے ساتھ سوتے ہیں کہ شاید کوئی شخص صبح سویرے ان کی بیٹی کا رشتہ لینے کے لئے ان کے ٹھیلے پر آ جائے مگر خاندان میں سے کوئی بھی شخص ان کی بہن کے ساتھ شادی کرنے کے لئے تیار نہیں ہر کوئی جانتا ہے کہ ہم غریب ہیں ہمارے حالات بدترین ہیں ہم خود کا پیٹ نہیں پال سکتے تو بہنوئی کی فرمائشیں بہن کی شادی پر دہیج کیسے دے
سکتے ہیں لڑکے نے کہا جناب عمران خان صاحب اگر آپ نے یہ زنگ آلود نظام نہ بدلا اگر اسلامی قانون نافذ نہ کیا تو بہت سارے باپ اپنی بیٹیوں کی پریشانی میں مبتلا رہتے ہوئے اس دنیا سے کوچ کر جائیں گے

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.